اعظم خان، ان کی اہلیہ اور بیٹے کو رامپور سے سیتا پور جیل منتقل کیا گیا

0
27

اطلاعات کے مطابق سخت حفاظتی انتظامات کے دوران اعظم خان اور ان کے کنبہ کو صبح ساڑھے چار بجے رامپور جیل سے سیتا پور جیل کے لئے روانہ کردیا گیا۔

رام پور میں بدھ کے روز جعلسازی کے معاملے میں خود سپردگی کرنے والے سماج وادی پارٹی کے رکن پارلیمنٹ اعظم خان کو جمعرات کی صبح سیتا پور جیل منتقل کر دیا گیا ہے۔ ان کی اہلیہ تزئین فاطمہ اور بیٹے عبداللہ اعظم کو بھی ان کے ساتھ سیتا پور جیل منتقل کیا گیا ہے۔
اطلاعات کے مطابق سخت حفاظتی انتظامات کے دوران اعظم خان کنبہ کو صبح ساڑھے چار بجے رامپور جیل سے سیتا پور جیل کے لئے روانہ کردیا گیا۔ سرکاری ذرائع کے مطابق، رامپور میں ان سیاستدانوں کے حامیوں کی جانب سے بنائے جانے والے احتجاج کے منصوبے کی رپورٹ کے پیش نظر ان کا تبادلہ کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔
ایک عہدیدار نے بتایا، ’’ایس پی صدر اکھلیش یادو کے جمعرات کو رام پور آنے کی توقع کی جا رہی ہے، ایسی صورتحال میں نظم و نسوق کی صورت حال درہم برہم ہوجائے گی۔‘‘ اس سے قبل اعظم خان کنبہ کو بریلی منتقل کرنے کا فیصلہ کیا گیا تھا لیکن بعد میں فیصلہ تبدیل کردیا گیا اور انہیں سیتا پور بھیج دیا گیا۔
واضح رہے کہ عبداللہ اعظم کے دو پیدائشی سرٹیفکیٹس کے جعلسازی کے معاملہ میں غیر ضمانتی وارنٹ جاری ہونے کے بعد اعظم خان، ان کی اہلیہ اور بیٹے نے خود سپردگی کر دی تھی۔ اس معاملے میں دو ماہ قبل بی جے پی کے ایک مقامی رہنما آکاش نے شکایت دی تھی۔ اسی ہفتے پولیس نے اعظم خان کے گھر پر قرقی کا نوٹس بھی چسپاں کیا گیا تھا۔ گزشتہ روز انہوں نے اس معاملہ میں عدالت میں خود سپردگی کر دی، جس کے بعد شام کو انہیں جیل بھیج دیا گیا۔
اعظم خان کے جیل جانے کے بعد اتر پردیش کے وزیر اعلی یوگی آدتیہ ناتھ نے طنز کرتے ہوئے کہا تھا کہ ’رامپور میں بجلی چمک رہی ہے۔‘

loading...

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here